بند کریں
شاعری مرزا محمد رفیع سودا

پہنا کچھ اپنی چشم کا دستور ہو گیا

-

Pehna kuch apni

مرزا محمد رفیع سودا

mirza muhammad rafi sauda

(248) ووٹ وصول ہوئے