بند کریں
شاعری محمد ابراہیم ذوق

اب تو گھبرا کے یہ کہتے ہیں کہ مرجائیں گے

-

ab to ghabra k ey kehty hain k mar jayn gy


(295) ووٹ وصول ہوئے