بند کریں
شاعری محمد ابراہیم ذوقجینا ہمیں اصلا نظر آتا نہیں اپنا

(419) ووٹ وصول ہوئے