بند کریں
شاعری مومن خان مومندیوان مومن

کہہ رہا ہے کون کس سے بے شکیبائی ملا

-

Keh raha hai


(213) ووٹ وصول ہوئے