بند کریں
شاعری محمد اظہار الحق

اکیلا ہوں میں اور کہیں دور وہ اوڑھنی اڑ رہی ہے

-

akaila hoon main or kahin door wo orhni ur rahi hai


(251) ووٹ وصول ہوئے