بند کریں
شاعری مصطفی زیدی

گریہ تو اکثر رہا پیہم رہا

-

Gar Yeh


(203) ووٹ وصول ہوئے