بند کریں
شاعری ناصر کاظمی

قہر سے دیکھ نہ ہر آن مجھے

-

Quhar sey daikh na


(222) ووٹ وصول ہوئے