بند کریں
شاعری نوید ہاشمی

جس کا ڈر تھا وہی حادثہ ہو گیا

-

jiss ka dar tha wohi hadsa ho gaya


(240) ووٹ وصول ہوئے