بند کریں
شاعری نوید‌رضا

اکیلے ہم ہی نہیں اس بلا کا رزق ہوئے

-

akaile hum hi nahi iss bala ka rizq hue


(232) ووٹ وصول ہوئے