بند کریں
شاعری نوید‌رضا

نام کو بھی مری پلکوں پہ ستارہ نہیں تھا

-

naam ko bhi mere palkoon pey sitara na tha


(289) ووٹ وصول ہوئے