بند کریں
شاعری قمر رضا شہزادہارا ہوا عشق

چشم نم تیری روانی سے الگ رہتا ہوں

-

chashme naam tere rawani se alaag rehta hai


(256) ووٹ وصول ہوئے