بند کریں
شاعری رانا سعید دوشی

دکھ ہے نیا نویلا تیری یادوں کا

-

dukh hai naya navela tere yadoon ka


(293) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان