بند کریں
شاعری راشد مراد

بس ہم سے بین نہیں ہوتے

-

bas ham sy baen nahi hoty


(157) ووٹ وصول ہوئے