بند کریں
شاعری راشد مراداس گھر میں مکیں تیرے سوا رکھ نہیں سکتے

(171) ووٹ وصول ہوئے