بند کریں
شاعری رخسانہ نورپ

خواب کو پانی بنا کر لے گیا ہے کیا کروں

-

khowab ko pani bana kar ly gaya hai kia karoon


(374) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان