بند کریں
شاعری صابر ظفر

وہ چاند پھر اُسی تالاب میں نظر آیا

-

wo chand phir ussi talab main nazar aya


(346) ووٹ وصول ہوئے