بند کریں
شاعری سچل سرمست

ہے جو عقیدہ عام کا

-

hai ju aqeeda aam ka


(212) ووٹ وصول ہوئے