بند کریں
شاعری سعید واثقنہ شام ہوں نہ شبستاں تمہارا عکس ہوں میں

(375) ووٹ وصول ہوئے