بند کریں
شاعری ساغر صدیقی

اشک رواں نہیں ندامت کے پھول ہیں

-

Ashk Rawaan


(209) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان