بند کریں
شاعری ساغر صدیقیدیوان ساغران بہاروں پہ گلستاں پہ ہنسی آئی ہے

(237) ووٹ وصول ہوئے