بند کریں
شاعری ساغر صدیقی

کلیوں کی مہک ہوتا تاروں کی ضیا ہوتا

-

kalioon ki mahek


(667) ووٹ وصول ہوئے