بند کریں
شاعری ساغر صدیقی

کچھ لوگ بچھا کر کانٹوں کو گلشن کی توقع رکھتے ہیں

-

Kuch loog bujhar


(261) ووٹ وصول ہوئے