بند کریں
شاعری صائمہ کامران

مجھ کو اب ترکِ محبت کی سزا دی جائے

-

mujhe ko abb tark e muhabbat ki saza di jaye


(236) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان