بند کریں
شاعری سلیم ساگر

دل نے صحرا میں بھی نہ وحشت کی

-

dil ne sehra main bhi na wehshaat ki


(235) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان