بند کریں
شاعری سلیم ساگررا دیکھوں تو مری تاب سفر جاتی ہے

(293) ووٹ وصول ہوئے