بند کریں
شاعری ثمینہ راجہ

ہمت مرا دل جو کھو رہا ہے

-

himmat mera dil ju kho rah ahai


(317) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان