بند کریں
شاعری ثمینہ راجہشاید کہ موجِ عشق جنوں خیز ہے ابھی

(285) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان