بند کریں
شاعری ثنا ء اللہ ظہیر

ہے دھواں ہی دھوئیں کے اندر بھی

-

hain dhoween hi dhoween k andar bhi


(202) ووٹ وصول ہوئے