بند کریں
شاعری سعود عثمانیکوئی فکر لو نہیں دے رہی کوئی شعر تر نہیں ہو رہا

(214) ووٹ وصول ہوئے