بند کریں
شاعری شبنم شکیل

سب وا ہیں دریچے تو ہوا کیوں نہیں آتی

-

saab waa hain dareche tu hawa kiyon nahi aati


(276) ووٹ وصول ہوئے