بند کریں
شاعری شاہد اسلم

فقیر لوگ ہیں ، کیسا جبیں کو بَل دینا

-

faqeer loog hain kaisa jabeen ko ball dena


(141) ووٹ وصول ہوئے