بند کریں
شاعری شہناز مزمل

ہے دور بہت سرحد امکاں

-

hai door buhat door sarhad e imkaan


(282) ووٹ وصول ہوئے