بند کریں
شاعری شکیل بدیوانیاب وہ خود محو علاج درد پنہاں ہو گئے

(233) ووٹ وصول ہوئے