بند کریں
شاعری شکیل بدیوانیدیوان بدایوانیلا رہا ہے مے کوئی شیشے میں بھر کے سامنے

(237) ووٹ وصول ہوئے