بند کریں
شاعری شرافت عباسترا شکار تجھی پر جھپٹ بھی سکتا ہے

(281) ووٹ وصول ہوئے