بند کریں
شاعری شیراز ساگردن سہانے نظر نہیں آتے

(408) ووٹ وصول ہوئے