بند کریں
شاعری صوفی تبسمافسانہ ہائے درد سناتے چلے گئے

(203) ووٹ وصول ہوئے