بند کریں
شاعری صوفی تبسمحسن مجبور جفا ہے شاید

(221) ووٹ وصول ہوئے