بند کریں
شاعری صوفی تبسمشجر شجر نگراں ہے کلی کلی بیدار

(201) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان