بند کریں
شاعری صوفی تبسموہ ملے تو گویا یہ حال تھا کہ نہ تھا جدائی کا غم کبھی

(393) ووٹ وصول ہوئے