بند کریں
شاعری تنویر الزماں

ابر برسا ہے نجانے کس لئے

-

abar-barsa-hai-najane-kiss-liye


(195) ووٹ وصول ہوئے