بند کریں
شاعری تنویر الزماںاگرچہ کوئی امکانی الم باقی نہیں پھر بھی

(215) ووٹ وصول ہوئے