بند کریں
شاعری تصدق حسین تصدق

مرے ہمنوا تری بے رُخی دلِ مبتلا کی شکست ہے

-

mere hamnawa tere berukhi dil e mubtala ki shikast hai


(1013) ووٹ وصول ہوئے