بند کریں
شاعری عمیر علی انجمدن میں مہتاب دیکھتے ہیں ہم

(72) ووٹ وصول ہوئے