بند کریں
شاعری عمیر علی انجم

ہنستے لمحے وبال کیسے ہوئے

-

hanste lamhe wabal kaise hue


(71) ووٹ وصول ہوئے