بند کریں
شاعری ولی دکنیاے دل سدا اس شمع پر پروانہ ہو

(162) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان