بند کریں
شاعری واصف علی واصفآسماں بھی جنوں کے زیر دام

(243) ووٹ وصول ہوئے