بند کریں
شاعری ظفر اقبالوہی تو رونقِ منظر بڑھانے والا تھا

(297) ووٹ وصول ہوئے