بند کریں
شاعری زبیر قیصر

یہ زندگی کسی صورت بسر نہیں ہوتی

-

yeh zindagi kisi sorat basar nahi hoti


(25) ووٹ وصول ہوئے