بند کریں
شاعری ذوالفقار عادل

سارا باغ الجھ جاتا ہے ایسی بے ترتیبی سے

-

Sara bagh ulajh jata hai aisi be tarteebi se


(34) ووٹ وصول ہوئے